Tabeer By Hazrat Yousaf

Khwab Mein Muhammad(SAW) Ko Dekhne Ki Tabeer

خواب میں محمدﷺکو دیکھنا

فی الحقیقت آنحضرتﷺ کو ہی خواب میں دیکھنا ہے کیونکہ حضرت ابوہریرہ رضی اللہ تعالیٰ عنہٗ سے روایت ہے کہ حضرت محمدﷺ نے فرمایا

 

جس نے مجھےخواب میں دیکھا اس نے حق دیکھا کیونکہ شیطان میری صورت اختیار نہیں کرسکتا اور جو شخص مجھے خواب میں دیکھے گا اس سے رنج دور رہے گا حیران نہ ہو گا مجھے خواب میں دیکھنےکی تعبیر زیادہ تر عقبی کی بھلائی ہے

 

نوٹ

جو شخص حضورﷺ کی زیارت پاک خواب میں کرے بس وہ سمجھے کہ میں نے آپ ﷺ کو عالم بیداری میں دیکھا ہے اور جس طرح خواب میں دیکھے اور آپ ﷺ سے کوئی ارشاد پائے یا حکم سنے تو بیدار ہو کر اس پر عمل کرے آپ کی زیارت ہر مسلمان کے لئے عین راحت ہے اورجنتی ہونے کی دلیل ہے

 

حضرت کرمانی رحمۃ اللہ علیہ فرماتے ہیں اگر کوئی شخص آنحضرت ﷺ کو خواب میں کسی شہر کے اندر دیکھے تو وہاں نعمت و دولت میں ترقی ہوگی لوگوں کو اطمینان قلب نصیب ہوگا اور اس مقام کے باشندے دشمن پر غالب آئیں گے

 

حضرت ابن سیرین رحمتہ اللہ علیہ فرماتے ہیں کہ خواب میں آنحضرت ﷺ کی زیارت نیک لوگوں کو ہوتی ہے اور آپ انہیں ان چیزوں کی خوش خبری سناتے ہیں جو انہیں ملنے والی ہوتی ہیں اور برے لوگوں کو جرم و گناہ سے بچاتے ہیں تاکہ انہیں عذاب سے رہائی ملے

 

حضرت عبداللہ بن عباس رضی اللہ تعالی عنہ فرماتے ہیں کہ اگر کسی شخص کو آنحضرت ﷺخواب میں نظر آئیں تو اسے نعمت و دولت اور ولایت ملے گی اور اگر کسی کو حضور ﷺ کا جنازہ خواب میں نظر آئے اس ملک پر آفات و حوادث کی گھٹائیں چھا جائیں گی

 

حضرت امام جعفر صادق رحمتہ اللہ علیہ فرماتے ہیں کہ پیغمبروں کو خواب میں دیکھنے کی تاویلات دس جوہات پر ہیں

رحم و کرم.نعمت.عزت.عظمت.مال.فتح.نیک بختی.جمعیت.طاقت.فلاح دارین. اور جہاں خواب نظر آئے وہاں کے باشندوں کی فلاح و بہبود

Tags

Samia

Tabeerinfo Developer Team do their best to share khwab ki tabeer, khwabon ki tabeer, khwab nama in urdu, & interpretation of dreams in urdu, english & latest news, baby names, religion information. We are helping peoples to know about there dreams interpretation from last 10 Years and also we are very thankful to all of our visitors and article readers.

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button